بھارت نے 20 سیٹیلائٹ ایک ساتھ خلا میں روانہ کردیے

نئی دلی: بھارت کے خلائی تحقیقاتی ادارے انڈین اسپیس ریسرچ آرگنائزیشن نے پہلی مرتبہ 20 سیٹیلائٹ ایک ساتھ خلا میں روانہ کردیئے۔
بھارتی میڈیا کے مطابق پی ایس ایل وی سی-34 خلائی گاڑی مقامی وقت کے مطابق صبح تقریباً ساڑھے 9 بجے آندھرا پردیش کے سری ہریکوٹا سے لانچ کی گئی جب کہ آئی ایس آراو کے سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ خلا میں بھیجے گئے مصنوعی سیارے میں بھارت کے 3 اور 17 غیرملکی سیٹیلائٹس ہیں۔ سب سے زیادہ 13 سیٹیلائٹ امریکا کے ہیں جب کہ کینیڈا، انڈونیشیا اور جرمنی کے سیٹیلائٹ بھی اس مشن میں شامل ہیں۔
یہ پہلا موقع ہے جب بھارت نے ایک ساتھ 20 مصنوعی سیاروں کو خلا میں بھیجا ہے، آئی ایس آر او نے اپریل 2008 میں کسی ایک مشن میں سب سے زیادہ 10 سیٹلائٹ روانہ کر کے ورلڈ ریکارڈ بنایا تھا جس کے بعد ناسا نے 2013 میں 29 سیٹیلائٹ اور روس نے 2014 میں ایک مشن میں 33 سیٹیلائٹ روانہ کئے تھے۔
واضح رہے کہ خلائی تحقیقاتی ادارے آئی ایس آر او نے اس سے قبل مریخ کے مشن منگل یان اور چاند کے مشن چندریان کو بھی کامیابی کے ساتھ پی ایس ایل وی کے ذریعہ ہی خلا میں لانچ کیا تھا۔
یاد رہے کہ 2013 میں بھی انڈین اسپیس ریسرچ آرگنائزیشن (آئی ایس آر او) نے ایک راکٹ مریخ کے مشن پر بھیجا تھا جس پر صرف 7 کروڑ 30 لاکھ ڈالر لاگت آئی تھی جبکہ ناسا کے مشن مریخ پر 67 کروڑ 10 لاکھ ڈالر اخراجات آئے تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.